Breaking News

ہیوی وہیکل شہریوں کے لئے جان لیوا

کراچی( رپورٹ۔کمال مخدوم)شہر قائد میں دن کے اوقات میں شاہراہوں پر دندناتی ہیوی وہیکل شہریوں کے لئے جان لیوا ثابت ہونے لگی ڈی آئی جی ٹریفک احمد یار چوہان بھی واقع سے مکمل طور پر لاعلم دکھائی دیئے جانے لگے شہریوں کو تحفظ فراہم کرنے کے لئے تعیناتی کا اتنا عرصہ گزر جانے کے باوجود ہیوی وہیکل کے حوالے سے کوئی مربوت حکمت عملی مرتب نہیں کی جا سکی

یہ بھی پڑھیں: عوام اور ملک دشمن ایجنڈے

دفتری اوقات اور اسکول کی چھٹی کے دوران شہر میں چلنے والی بغیر وٹنس اور ڈرائیونگ لائسنس کے شہر میں چلنے والے پانی کے ٹینکرز اور ریتی بجری کے ٹرک سمیت مزدا ٹرک شہریوں کے لئے خوف کی علامت بننے لگے رواں سال کے دوران ٹریفک حادثات میں جان سے جانے والے شہریوں کے اعداد و شمار جاری ہونے کے بعد بھی ٹریفک پولیس کا عملہ شہریوں کو تحفظ فراہم نا کرسکا گزشتہ روز یونیورسٹی روڈ پر قائم میٹرو کے مقام پر تیز رفتار ٹینکر نے چالیس سالہ عرفان ولد نور محمد کو ٹکر مار کر ہلاک کردیا اور موقع سے فرار ہونے میں کامیاب ہوگیا دوسری جانب نیپا پل کے مقام پر تیز رفتار گاڑی کی ٹکر سے ایک شہری جان کی بازی ہار گیا جبکہ دوسرا شدید زخمی ہوگیا جسکو طبی امداد کے لئے قریبی اسپتال منتقل کیا گیا کراچی کی سڑکیں موٹرسائیکل سواروں کے لیے موت کا جال ثابت ہوئیں جہاں رواں سال کے ابتدائی 10 ماہ کے دوران 116 بائیکرز جان کی بازی ہار چکے ہیں جب کہ مجموعی طور پر روڈ حادثات میں 165 شہری لقمہ اجل بنے کراچی کی سڑکوں پر چلنے والی بڑی گاڑیاں سب سے زیادہ شہریوں کی جانیں نگل رہی ہیں، کراچی ٹریفک پولیس کی جانب سے شیئر کیے گئے اعداد و شمار کے مطابق جاں افراد میں سے 11 شہری بسوں، 12 واٹر ٹینکرز، 14 ڈمپر ٹرک اور آئل ٹینکرز، 20 ٹرالرز اور 37 افراد دیگر ٹرکس کے حادثات میں جاں بحق ہوئے اعداد و شمار سے پتا چلتا ہے کہ شہر میں تقریباً 65 فیصد حادثات ہیوی ٹریفک کے باعث پیش آتے ہیں ٹریفک سیکشن عملہ شہریوں کو تحفظ فراہم کرنے کے بجائے ہیوی وہیکل ڈرائیورز کو بھاری رشوت کے عوض چھوٹا سا چالان دے کر اعلی حکام کو مطمئن کرنے میں مصروف دکھائی دیتے ہیں جس کی وجہ سے ٹریفک حادثات میں جان سے جانے والے شہریوں کو ہیوی وہیکل مافیا سے نا بچایا جا سکا ہے۔

ہیوی وہیکل شہریوں کے لئے جان لیوا

About admin

Check Also

لاپتا شادی شدہ خاتون کا ڈراپ سین

کراچی کے علاقے گلشن حدید سے لاپتا شادی شدہ خاتون کا ڈراپ سین، خاتون مرضی …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *